کبھی اِس نگر تجھے دیکھنا،

کبھی اِس نگر تجھے دیکھنا،
کبھی اُس نگر تجھے ڈھونڈنا
کبھی رات بھر تجھے سوچنا،
کبھی رات بھر تجھے ڈھونڈنا

مجھے جا بجا تری جسُتجُو،
تجھے ڈھونڈتا ہوں میں کوُبکو
کہاں کھل سکا ترے رو بُرو ،
مرا اِس قدر تجھے ڈھونڈنا

مرا خواب تھا کہ خیال تھا،
وہ عروج تھا کہ زوال تھا
کبھی عرش پر تجھے دیکھنا ،
کبھی فرش پر تجھے ڈھونڈنا

یہاں ہر کسی سے ہی بیر ہے ،
ترا شہر قریہء غیر ہے
یہاں سہل بھی تو نہں کوئی ،
مرے بے خبر تجھے ڈھونڈنا

تری یاد آئی تو رو دیا ،
جو توُ مل گیا تجھے کھو دیا
میرے سلسلے بھی عجیب ہیں ،
تجھے چھوڑ کر تجھے ڈھونڈنا

یہ مری غزل کا کمال ہے 
کہ تری نظر کا جمال ہے
تجھے شعر شعر میں سوچنا،
سر بام ودر تجھے ڈھونڈنا . 

1493253_10152189486163291_1522243313_n

Posted on May 24, 2014, in Urdu Poems and tagged , , , , , , . Bookmark the permalink. Leave a comment.

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s